کورونا وائرس: جیلوں سے گنجائش سے 134 فیصد زیادہ قیدی، ’گھٹن سے نا مرا تو کورونا سے ضرور مر جاؤں گا‘

’مجھے جنوری میں اڈیالہ جیل لایا گیا اور پھر دو ماہ بعد کورونا کی وبا پھیلنے کے بعد قیدیوں کی رشتہ داروں سے ملاقاتوں پر پابندی عائد کر دی گئی۔ یہاں احتیاطی تدابیر کے طور پر صرف پیناڈال موجود تھی۔۔۔ مجھے لگا اگر میں جیل کے اندر گھٹن سے نہیں مرا تو کورونا سے ضرور…
Read more


December 14, 2020 0